اردو ادب


کتاب(the-book)

کتاب

23 اپریل کا دن’ کتاب کا عالمی دن‘(World Book Day)کے طور پر منایا جاتا ہے۔ اقوامِ عالم اپنے بچوں میں کتب بینی کا شوق اور کتاب سے لطف اندوز ہونے کی حِس پیدا کرنے کے آرزو مند ہیں اور اس دن کو منانے کا یہی بنیادی مقصد ہے۔ پاکستان میں یہ دن نہیں منایا جاتا کیونکہ ہم اپنے بچوں میں کتاب جیسی لغو چیز سے اُنسییت پیدا کرنا نہیں چاہتے۔ ہمیں اپنے بچوں اور اگلی نسلوں سے کتب بینی سے زیادہ اہم اور دائمی منافع بخش کام لینے ہیں کہ یہ دنیا فانی ہے۔ 23 اپریل کا دن عالمی لٹریچر کا علامتی دن ہے کہ اسی تاریخ کو دنیا کے نامور لکھاری اور شاعر دنیا سے منتقل ہوئے، یعنی انتقال پا گئے جیسے ولیم شیکسپئیر، ما گوئیل ڈی سروانٹس، ولیم ورڈز ورتھ اور بہت سے نابغۂ ر وزگار دانشور، اہلِ قلم وغیرہ۔

فراقؔ کی غزلوں میں اسلامی تہذیب(poetry-of-faraq)

فراقؔ کی غزلوں میں اسلامی تہذیب

تہذیب کا مفہوم:۔
تہذیب کے لغوی معنی ہیں ’’چھانٹنا‘‘، ’’سنوارنا‘‘، ’’خالص کرنا‘‘۔ تہذیب کا لفظ اصطلاحی معنی میں اپنے اندر نہایت وسیع مفہوم رکھتا ہے، جو زندگی کے تمام اطوار، رہن سہن، معاشرت اور سامان پر حاوی ہے۔


ارے بولو توکچھ بھائی(a-poem)

ارے بولو توکچھ بھائی

ایک مزدور

ذرا سا شور گر کم ہو
یہاں چلتی مشینوں کا
تو پوچھوں تم سے میں بھائی
سنا ہے آج ہی میں نے
کسی پنج تارہ ہوٹل میں
یہ زیرِغور تھا عُقدہ
کہ مزدورں کی حالت کو
انھوں نے اب بدلنا ہے
تمہاری میری قسمت نے
بہر سُو اَب سنورنا ہے

کہاں میں رُکتا؟(a-poem)

کہاں میں رُکتا؟

کہاں میں رُکتا .......کہ سدرۃ المنتہی سے اونچا تو کچھ نہیں تھا!

چڑھائی مشکل تھی ...
آسماں گیر ہاتھ اونچے اُٹھے ہوئے
پاؤں آگے بڑھتے
لپکتے، رستوں کو ماپتے ، سیڑھی سیڑھی چڑھتے
بدن تموج میں ایسے حرکت پذیر
جیسے کہ تیرتا ہو!
 

Islamic Council Norway Fails Muslims and the Society

By hiring Nikab-wearing Leyla Hasic, Islamic Council Norway has taken a clear stand in a controversial debate. Norwegian Muslims neither are represented nor served with t

Read more

loading...