مباحث (172)

  وقت اشاعت: 01 2017

بادشاہ گر کہلانے والی کراچی کی سیاست  کافی عرصہ سے میوزیکل چئیرکے گرد گھومتی نظر آرہی ہے۔ تاحال چئیر کے گرد  کھلاڑیوں کی گردش کا سلسلہ جاری ہے اور یہ فیصلہ ہوتا دکھائی نہیں دے رہا کہ آخری چئیر جب رہ جائے گی تو اس پرکون براج مان ہوگا ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 20 2017

جب بھی صادق و امین کا لفظ سنائی دیتا ہے تو ذہن میں ہمارا سیاسی نظام آتا ہے  کیوں کہ اس لفظ کی بازگشت حکومتی ایوانوں میں ہی زیادہ سنائی دیتی ہے۔ یوں محسوس ہوتا ہے کہ صادق و امین اگر کہیں پائے جاتے ہیں تو وہ یا تو سیاسی برادری ہوتی ہے یا پھر سرکاری ملازمین،  رہے عوام تو جناب یہ کس کھیت کی مولی ہیں کہ ان میں کوئی مائی کا لال صادق و امین ہو۔ یہ تو وہ برادری ہے جو صادق و امین ہونے کی مہر ایک پرچی پر لگا کر صادق و امین  امیدوارکے ہاتھ میں تھما دیتی ہے۔ اپنی ہی دی ہوئی اس سند کی ہر پانچ سال بعد   تجدید بھی کردیتی ہے ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 04 ستمبر 2017

میری زندگی کی یہ اہسی تحریر ہے جسے  سید انور محمود  نہیں پڑھ پائیں گے  ۔  اپنی ہر تحریر، ہر شعر اور ہر فیس بک پوسٹ پر مجھے ان کی رائے کا شدت سے انتظار رہتا تھا۔  آج نہایت کرب کے ساتھ  یہ کہنا پڑرہا ہے کہ ان کے  بارے میں لکھی  اس تحریر پر ان کی کوئی رائے مل نہیں سکے گی ۔   آہ  !  آج ان کے کالم  کے لوگو پر درج تحریر "سچ کڑوا ہوتا ہے " پر  شدت سے یقین ہوچلا کہ سچ اس قدر کڑوا ہوتا ہے  اور یہ سچ ہے کہ آپ ہم میں نہیں رہے ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 30 جولائی 2017

ہمارے معاشرے کا یہ ایک بہت بڑا المیہ ہے کہ جب بھی کوئی درد ناک واقع رونما ہوتا ہے تو ہر طرف بہت احتجاج نظر آتا ہے لیکن آہستہ آہستہ یا تو ہم اسے یکسر بھول جاتے ہیں یا پھر کوئی نیا رونما ہونے والا واقعہ گزرے واقعے کا اثر زائل کر دیتا ہے۔ جرگے پنچایت، محلہ کمیٹیاں قارئین کے لئے یہ کوئی نئے نام نہیں اور قارئین یہ بھی اچھے طرح جانتے ہیں کہ ان پنچائیت میں کون لوگ شامل ہوتے ہیں اور پنچائیت کا سر پنچ کسے مقرر کیا جاتا ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 30 جون 2017

ماں کتنا  خوبصورت  اور شیریں لفظ ہے۔ کتنا  پرسکون اور اطمینان سے بھرپور  کتنا تحفظ بھرا۔  اس لفظ کی خوبصورتی اور کشش کا اندازہ  اسے ہی ہو سکتا ہےجس نے ماں کی محبت اور چاہت کے ہلکورے لئے ہوں۔ ماں جیسی بلند ہستی اللہ کی قدرت کے کرشموں میں ایک انوکھا اور منفرد شاہکار ہے۔ اس کی عطا کردہ نعمتوں میں ایک عظیم نعمت ہے ۔ ماں کی صحیح قدر و قیمت کا اندازہ تبھی ہوتا ہے جب وہ دنیا کے رنج و غم سے  بہت دور خاموش اور سنسان بستی میں منوں مٹی کے نیچے  چلی جاتی ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 10 جون 2017

شنگھائی تعاون تنظیم ایک یوریشیائی  سیاسی و اقتصادی تعاون تنظیم ہے جسے شنگھائی میں  سن 2001 میں چین، قازقستان ،کرغیزستان، روس، تاجکستان اور ازبکستان کے رہنماؤں نے قائم کیا ۔ یہ تمام ممالک شنگھائی  فائیو کےاراکین تھے سوائے ازبکستان کے جو اس میں بعد میں شامل ہوا تھا۔  جس کے بعد اس تنظیم کا نام تبدیل کرکے شنگھائی تعاون تنظیم رکھ دیا گیا۔  

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 04 مئی 2017

شیر میسور کا لقب پانے والے ٹیپو سلطان کو آج دنیا سے بچھڑے218 برس بیت گئے۔ فتح علی ٹیپو المعروف ٹیپو سلطان10 نومبر 1750 کو میسور میں پیدا ہوئے۔ انہیں ایک صوفی بزرگ ٹیپو مستان شاہ کی دعاؤں کا ثمر کہاجاتا تھا۔ اسی لیے ان کا نام فتح علی ٹیپو رکھا گیا تھا۔ حیدر علی کے اس فرزند کی ولادت کے بعد ایک سال کے اندر حیدر علی ڈنڈی گل کے گورنر ہو گئے۔ تھوڑے ہی عرصے میں انہوں نے اپنی مملکت قائم کی۔ انہوں نے انگریزوں کے بجائے اپنی فوج کی تربیت کے لیے فرانسیسی فوجیوں کو مقرر کیا۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 29 اپریل 2017

ایک بڑی جمہوریت کہلانے والا ملک بھارت اپنے علاوہ ہر چیز سے خوفزدہ ہے۔ ابھی کبوتروں کا خوف دل سے نکلا نہیں کہ سوشل میڈیا  کا خوف سر پر سوار کرلیا ۔ گزشتہ دنوں مقبوضہ کشمیر میں سوشل میڈیا کو بند کردیا گیا جس کی ایک ہی وجہ ہے کہ مظلوم کشمیریوں پر بھارتی فوجیوں کے ظلم و ستم  کی ویڈیوز اور تصاویر دنیا کے سامنے  نہ آنے دی جائیں۔  کیوں کہ اس سے بھارتی حکومت کا مکروہ چہرہ دنیا کے سامنے آتا ہے ۔ پاکستان پر ہر الزام لگانے والا بھارت کشمیر کے بچوں تک سے خوفزدہ نظر آتا ہے۔ سوشل میڈیا پر روزانہ  سینکڑوں ویڈیوز اور تصاویر جاری ہوتی ہیں، جن میں بھارتی فوج کے کشمیریوں پر ظلم کے ساتھ ساتھ پاکستان سے دشمنی بھی صاف نظر آتی ہے۔  معصوم بچوں اور بچیوں پر تشدد کرکے پاکستان مخالف نعرے لگوائے جاتے ہیں ۔

مزید پڑھیں

Praise and prayers for the great people of Turkey

One year ago, this day, the people of Turkey set an example by defending their elected government and President Recep Tayyip Erdogan against military rebels.

Read more

loading...