معزز صارفین ہماری ویب سائٹ اپ ڈیٹ ہو رہی ہے۔ اگر آپ کو ویب سائٹ دیکھنے میں دشواری پیش آرہی ہے تو ہمیں اپنی رائے سے آگاہ کریں شکریہ

افغانستان میں 9 افراد کی لاشیں برآمد

  وقت اشاعت: 20 فروری 2018

کابل: افغان حکام کے مطابق دہشت گردوں کی جانب سے گزشتہ سال اغوا کیے جانے والے 9 شہریوں کی لاشیں افغانستان کے شمالی صوبے ننگر ہار سے بر آمد کرلی گئیں ہیں۔

خبروں کے مطابق ضلعی گورنر کا کہنا ہے کہ بر آمد کی گئی لاشوں میں 3 قبائلی رہنما شامل ہیں جنہیں گزشتہ دنوں ایک ہی قبر میں دفن کیا گیا تھا۔ ضلع کوٹ کے سید رحمٰن مہمند کا کہنا تھا کہ آچن ضلع کے قریب مقامیوں نے لاشوں کو تلاش کیا۔ ان تمام 9 افراد کو کوٹ ضلع سے دہشت گردوں نے 2017 کے اوائل میں اغوا کیا تھا جس کے بعد سے اب تک ان افراد کی کوئی اطلاع نہیں مل سکی تھی۔

سید رحمٰن مہمند کا کہنا تھا کہ دہشت گرد تنظیم داعش ان افراد کے اغوا کے پیچھے ملوث ہے تاہم داعش کی جانب سے ابھی تک  ان ہلاکتوں کی ذمہ داری قبول نہیں کی گئی۔  واضح رہے کہ شمالی افغانستان دہشت گرد تنظیم داعش اور طالبان کے اثر میں ہے۔ حالیہ دنوں میں افغان طالبان نے سیکیورٹی فورسز پر حملوں میں اضافہ کردیا ہے جبکہ شدت پسند تنظیم داعش بھی افغانستان کے مختلف حصوں میں اپنے قدم جمانے میں مصروف ہے۔ امریکی حکام کا ماننا ہے کہ افغانستان میں داعش کے تقریباً 600 سے 800 جنگجو موجود ہیں، جن میں سے زیادہ تر صوبہ ننگرہار میں موجود ہیں۔

افغانستان میں 1996 سے 2001 کے دوران افغان طالبان نے افغانستان میں اپنی حکومت امارت اسلامیہ قائم کی تھی اور وہ ایک مرتبہ پھر ملک کا کنٹرول حاصل کرنے کے لیے جنگ میں مصروف ہیں۔  افغانستان میں امریکہ کی اتحادی افواج نے گزشتہ 14 برس سے جاری مشن کو ختم کردیا تھا، جس کا آغاز 11 ستمبر 2001 میں ورلڈ ٹریڈ سینٹر پر ہونے والے حملے کے بعد طالبان کے خلاف جنگ سے ہوا تھا۔

یکم جنوری 2015 سے نیٹو کی انٹرنیشنل سیکیورٹی اسسٹنس فورس (ایساف) کو ٹریننگ اینڈ سپورٹ مشن میں تبدیل کردیا گیا، جس کے تحت تقریباً 13 ہزار نیٹو فوجی افغانستان میں قیام کریں گے۔ ان میں امریکی فوجیوں کی زیادہ تعداد ہے۔

آپ کا تبصرہ

Donald Trump's policy towards Pakistan

Donald Trump's; the president of US war of tweets was a fierce attack on Pakistan, accusing the country of "lies and deceit" and making "fools" of US leaders. Trump decla

Read more

loading...