وزیراعظم کے خلاف شیخ رشید کی درخواست مسترد

  وقت اشاعت: 12 فروری 2018

اسلام آباد: سپریم کورٹ نے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے خلاف عوامی مسلم لیگ (اے ایم ایل) کے سربراہ شیخ رشید کی ایل این جی کی درآمد میں بے ضابطگیوں کے حوالے سے دائر درخواست کو مسترد کردیا۔

سپریم کورٹ میں چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے ایل این جی کی درآمد میں بے ضابطگیوں کے حوالے سے دائر درخواست کی سماعت کی۔ سماعت کے آغاز میں شیخ رشید کے وکیل لطیف کھوسہ نے اپنے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ عدالتی احکامات کی سنگین خلاف ورزیاں ہو رہی ہیں اور حکومت اختیارات کا غلط استعمال کر رہی ہے۔ چیف جسٹس نے لطیف کھوسہ کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ عدالت کو پہلے کیس کے حقائق سے آگاہ کیا جائے۔

لطیف کھوسہ نے عدالت کو بتایا کہ پاکستان میں قدرتی گیس کے وسیع ذخائر موجود ہیں۔  ایل این جی معاہدہ 15 سال کے لیے کیا گیا ہے اور اس گیس کی وجہ سے ملک کی خوبصورتی کو بدصورتی میں تبدیل کیا جارہا ہے۔ لطیف کھوسہ کے دلائل سننے کے بعد چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے کہا کہ درخواست آرٹیکل 184 تھری کے زمرے میں نہیں آتی لہٰذا اسے مسترد کیا جاتا ہے۔

خیال رہے کہ 9 فروری کو سپریم کورٹ نے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے خلاف عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید کی ایل این جی کی درآمد میں بے ضابطگیوں کے حوالے سے دائر درخواست کو سماعت کے لیے مقرر کیا تھا۔ شیخ رشید نے وزیراعظم کے خلاف دائر درخواست میں موقف اختیار کیا تھا کہ حکومت نے ایل این جی معاہدے میں قوانین اور سپریم کورٹ کی ہدایات کو مدنظر نہیں رکھا اور غیر قانونی معاہدے سے پاکستان کو اربوں ڈالر کا نقصان ہوا۔

آپ کا تبصرہ

Donald Trump's policy towards Pakistan

Donald Trump's; the president of US war of tweets was a fierce attack on Pakistan, accusing the country of "lies and deceit" and making "fools" of US leaders. Trump decla

Read more

loading...