معزز صارفین ہماری ویب سائٹ اپ ڈیٹ ہو رہی ہے۔ اگر آپ کو ویب سائٹ دیکھنے میں دشواری پیش آرہی ہے تو ہمیں اپنی رائے سے آگاہ کریں شکریہ

طالبان سے مذاکرات ناممکن: ٹرمپ

  وقت اشاعت: 30 جنوری 2018

واشنگٹن:  امریکہ کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے افغان طالبان کے ساتھ مذاکرات کے امکان کو مسترد کردیا ہے۔ انہوں نے یہ اعلان افغانستان کے دارالحکومت کابل میں یکے بعد دیگر متعدد بڑے حملوں کے بعد کیا ہے۔

ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا  ہے کہ ‘میرا خیال ہے کہ ہم اس وقت مذاکرات کے لیے تیار نہیں ہیں اس لیے طالبان سے مذاکرات نہیں چاہتے، وہ لوگ معصوم شہریوں کو قتل کررہے ہیں’۔ ان کا کہنا تھا کہ ‘مذاکرات کے لیے وقت آئے گا لیکن وہ وقت بہت دور ہے’۔

واضح رہے کہ 29 جنوری کو کابل فوجی اکیڈمی مارشل فہیم ڈیفنس یونیورسٹی پر دہشت گردوں کے حملے میں افغان سیکیورٹی فورسز کے 11 اہلکار ہلاک اور 16 زخمی ہوگئے تھے۔ اس سے قبل کابل میں ہی ریڈ زون میں ایمبولینس کے ذریعے ہونے والے بم دھماکے کے نتیجے میں 95 سے زائد افراد جاں بحق اور 158 سے زائد زخمی ہوگئے تھے۔  رواں ماہ 21 جنوری کو کابل میں واقع انٹر کانٹی نینٹل ہوٹل میں فوجی لباس میں ملبوس دہشت گردوں کے حملے میں 30 سے زائد افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے تھے۔

علاوہ ازیں اے ایف پی نے اپنی رپورٹ میں بتایا ہے کہ کابل میں افغان فورسز اور امریکی اہلکاروں پر طالبان اور داعش کے تازہ 3 حملوں سے امریکی اور افغان انتظامیہ میں کھلبلی مچ گئی ہے جس کے بعد افغان صدر اشرف غنی نے ٹوئٹ میں کہا کہ ‘افغانستان کے خفیہ اداروں اور وزارت داخلہ کی سطح پر اصلاحات کی اشد ضرورت ہے’۔ دوسری جانب طالبان اور داعش کے کامیاب حملوں کے بعد امریکی حکمت عملی اور افغان سیکیورٹی فورسز کی کارکردگی پر عوامی سطح پر تحفظات میں اضافہ ہوگیا ہے جبکہ ان حملوں پر عوامی سطح پر سخت غم و غصہ بھی پایا جاتا ہے۔

افغان خفیہ ایجنسی کے سربراہ محمد معصوم نے دفاعی موقف اختیار کرتے ہوئے کہا کہ ‘دہشت گرد کارروائیوں کا رخ بدل رہے ہیں لیکن اس کا مطلب ہرگز سیکیورٹی ناکامی نہیں ہے۔ ہم بعض حملوں کو روکنے میں ناکام ہوئے لیکن متعدد حملوں کو روکنا مشکل ہے’۔

واشنگٹن میں ولسن سینٹر کے رکن مائیکل کینگل مین کا کہنا تھا کہ طالبان اور داعش عسکری بنیادوں پر مشترکہ حملے کررہے ہیں جبکہ نظریاتی سطح پر وہ ایک دوسرے کے مخالف ہیں اور دونوں کا مل کر حملہ کرنا دراصل تباہی مچا کر خوفزدہ کرنا اور حکومت پر عوامی اعتماد کو ناکارہ بنانا ہے۔

بعض افغان حکام کا کہنا تھا کہ سیکیورٹی اقدامات کم ہیں تاہم کابل میں داخل ہونے کے ہزاروں راستے ہیں اور افغان پولیس میں اتنی اہلیت نہیں کہ تمام راستوں پر سیکیورٹی فراہم کر سکیں۔

آپ کا تبصرہ

Donald Trump's policy towards Pakistan

Donald Trump's; the president of US war of tweets was a fierce attack on Pakistan, accusing the country of "lies and deceit" and making "fools" of US leaders. Trump decla

Read more

loading...