مباحث


  وقت اشاعت: 1 دن پہلے 

ہر شخص امن و امان کا خواہاں ہے اور غنڈہ گردی ، ظلم و زیادتی اور تشدد پسند نہیں کرتا۔ یہی وجہ ہے کہ جب کسی ریاست میں سکون و اطمینان غارت ہونے لگتا ہے تو ریاست کے باشندگان برسراقتدار حکومت کے خلاف نہ صرف اپنا احتجاج و مظاہرے کرتے ہیں بلکہ وقت آنے پر اس حکومت کو تبدیل کرنے کی کوشش بھی کرتے ہیں۔ لیکن تصور کیجئے ایک ایسے مقام کی جہاں ایک حکومت سے تنگ آکر عوام دوسری حکومت کو اقتدار میں لائیں، اس کے باوجود آنے والی نئی حکومت اور اس کے ذمہ داران لا اینڈ آڈر کو کنٹرول نہ کرسکیں۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 1 دن پہلے 

پاکستان اس وقت بطور ریاست انتہا پسندی جیسے موذی مرض کا مقابلہ کرنے کی کوشش کررہا ہے ۔ لیکن جس مضبوط حکمت عملی سے پاکستان کو بطور ریاست ، حکومت ، اداروں اور معاشرہ اور وہ طبقات جو رائے عامہ کی تشکیل کرتے ہیں، کام کرنا چاہیے تھا ، وہ نہیں کیا جاسکا ۔ اس ضمن میں ہم نے انتہا پسندی اور دہشت گردی سے نمٹنے کے لیے 20 نکاتی نیشنل ایکشن پلان بھی ترتیب دیا لیکن اس پر بھی وفاقی اور صوبائی حکومتوں کی سطح پر کوئی ٹھوس کام دیکھنے کو نہیں ملا۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 1 دن پہلے 

اللہ تبارک و تعالی جل جلالہ وعم نوالہ کا ارشاد عالی ہے ےَااَیُّھَا الَّذِےْنَ آمَنُوْ کُتِبَ عَلَےْکُمُ الصِّےَامُ کَمَا کُتِبَ عَلَی الَّذِےْنَ مِنْ قَبْلِکُمْ لَعَلَّکُمْ تَتَّقُوْنَ۔ اے ایمان والو تم پر روزے فرض کر دیے گئے ہیں جیسے کہ تم سے پہلی امتوں پر فرض تھے ۔ حضور اکرم ﷺ کا ارشاد عالی ہے کہ اسلام کے پانچ بنیادی ارکان ہیں ایمان ، نماز ، زکوۃ ، روزہ ، حج ۔

مزید پڑھیں

loading...

  وقت اشاعت: 2 دن پہلے 

سابق امریکی صدر رچرڈ نکسن امریکہ کے 37 ویں صدر تھے۔ وہ دو مرتبہ امریکی صدر منتخب ہوئے۔  پہلی مرتبہ 1968 اور دوسری مرتبہ 1972 میں۔ اپنی دوسری  صدارتی  انتخابی مہم کے دوران وہ مستقل  چین پر برستے رہے لیکن  رچرڈ نکسن ہی وہ پہلے امریکی صدر تھے جو 1972 میں عوامی جمہوریہ چین کے ایک ہفتے کے دورے پر بیجنگ پہنچے تھے ۔  بیجنگ پہنچ کر امریکی صدر نے اپنے خطاب میں کہا تھا کہ یہ دنیا کی تاریخ بدل دینے والا ہفتہ ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 2 دن پہلے 

سنہ 1980  کے لگ بھگ کی بات ہے جب مولانا امین احسن اصلاحی  کی تفسیر تدبر قرآن مکمل ہو چکی تھی۔ ان دنوں ہمدم دیرینہ جاوید احمد  (غامدی، ان دنوں انہوں نے ابھی اپنے نام کے ساتھ یہ اضافہ نہیں کیا تھا) نے مولانا محترم کو اس بات پر قائل کر لیا کہ ادارہ تدبر قرآن و حدیث کے نام سے علم و تحقیق کا ایک ادارہ قائم کیا جائے۔ اس کے دستور کی تشکیل کے لیے ہونے والے اجلاسوں میں مجھے بھی شرکت کی دعوت دی جاتی تھی۔ یہ اجلاس ہمارے بزرگ دوست ڈاکٹر فرخ ملک  کے دفتر واقع ٹیمپل روڈ پر منعقد ہوتے تھے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 3 دن پہلے 

سیاسی جماعتوں نے اگلے سال ہونے والے انتخابات کی تیاریوں کا آغاز کردیا ہے اور ایک مربوط منصوبہ بندی کے تحت سرگرمیوں شروع ہورہی ہیں۔ سیاسی جماعتیں رکنیت سازی، جماعتی تنظیم اور منشور سازی کا کام جاری ہے ۔ نہ حزب مخالف کی جانب سے بے بنیاد الزامات عائد کئے جارہے ہیں اور نہ ہی حکومت سنگ بنیاد، افتتاح اور ترقیاتی فنڈز کا لالچ عوام کو دے رہی ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 3 دن پہلے 

ہم اہل پنجاب کا شین قاف درست نہیں ہوتا۔ حروف پر مبنی زبانوں میں اصوات کا اختلاف پایا جاتا ہے۔ بچہ والدین اور ارد گرد کے افراد سے خود بخود آوازیں سیکھ لیتا ہے۔ متعلقہ منطقے میں جو آوازیں موجود نہیں ہوتیں ، ان کی تحصیل کار دارد ہوتی ہیں۔ یہ سامنے کی بات تھی جسے عرب و عجم کا جھگڑا بنا دیا گیا۔ دلی اور لکھنو کے دبستان وجود میں آئے۔ نیاز مندان لاہور میں پطرس، تاثیر، سالک ، حفیظ اور مہر جیسے جدید علوم کے شناور شامل تھے مگر گومتی کے پار سے یہی پیغام آیا کہ اقبال جوش کی ’جی ہاں‘ کے جواب میں ’ہاں جی‘ کہتے رہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 3 دن پہلے 

دوسری جنگ عظیم کے خاتمہ کے بعد غالب ا ور فاتح اقوام نے مل کر جنگی زبوں حالی کا شکار ہستی بستی انسانی آبادیوں کو ویرانیوں اور کھنڈرات میں تبدیل کیا۔ اور اُن پر تعمیر و ترقی کے محلات تعمیرات کرنے کا  منفرد اور مخصوص پلان تیار کیا تھا۔ تاہم اُس میں اس بات کا خاص طور پر خیال رکھا گیا تھا کہ عالمی سیاست و معیشت کو اس طرح پروان چڑھایا جائے کہ اس کے فوائد و ثمرات سے صرف چند بڑے اور مال دار ممالک ہی مستفید ہوسکیں۔ چھوٹے اور غریب ممالک صرف آہوں اور سسکیوں پر ہی گزارہ کریں ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 3 دن پہلے 

بچپن سے ہی جن ممالک کو دیکھنے کی خواہش ہوئی، اُن میں لبنان بھی شامل تھا۔ اور پھر یہ خواہش بے تابی میں اس وقت بدل گئی جب لبنان خانہ جنگی کا شکار ہوا۔ عالمی اور علاقائی طاقتوں نے اس خانہ جنگی میں بلاواسطہ اور بلواسطہ اپنا اپنا حصہ ڈالا۔ امریکہ، اسرائیل، شام، ایران، لیبیا اور دیگر ممالک سمیت۔ اردن میں قیام کے دوران جب یاسر عرفات کی قیادت میں فلسطینی ، اسرائیل کو شکست دینے کے قریب ہوگئے تو عرب حکمرانوں کی سازشوں نے اس فلسطینی فتح کو شکست میں بدل دیا۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 4 دن پہلے 

یہ ظلم ہے ، زیادتی ہے میرے ملک سے میرے عوام سے ۔۔۔۔۔ اسے بند کرو ، اس کا سدباب کرو، ہم کیا اتنے گئے گزرے ہیں جو چاہے ہمیں اپنے ایئر رپورٹ پر روک لے، ہماری جامہ تلاشی کے بہانے ہماری عزتیں اچھالے، ہمیں دہشت گرد قوم کا طعنہ دے ، ہماری قوم کو دھوکہ باز، بے ایمان کہے۔ یہ ظلم ہے ، زیادتی ہے میرے ملک سے، میرے عوام سے ۔۔۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 4 دن پہلے 

پاکستانی کرکٹ کا آسمان ستاروں کی کہکشاؤں سے جگمگا رہا ہے۔ ان ستاروں پر مشتمل ایک طویل فہرست ہے۔ اس فہرست میں وہ تمام نامی گرامی کھلاڑی موجود ہیں جنہوں نے پاکستان کا نام دنیا بھر میں اپنی محنت اور لگن سے روشن کر رکھا ہے۔ آج دنیا میں جہاں کہیں بھی کرکٹ کی بات ہوتی ہے تو پاکستان کو ان کھلاڑیوں کی وجہ سے ضرور یاد کیا جاتا ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 4 دن پہلے 

سالانہ بجٹ کب آئے گا، اس کا اندازہ یوں تو کیلنڈر سے ہو جاتا ہے لیکن اس کے کچھ آثار کیلنڈر دیکھنے کی زحمت سے بھی بچا لیتے ہیں۔ بجٹ کی آمد سے قبل دو انتہائی شناسا معمولات شروع ہو جاتے ہیں۔ حکومتی دعوے اور کاروباری تنظیموں کی داد فریاد۔ حکومتی وزراء کی گفتگو کا لبِ لباب یہ ہوتا ہے کہ اس سال ریکارڈ بنانے والوں کو دگنا کام کرنا پڑے گا کیونکہ گزشتہ سال کے تمام ریکارڈ ٹوٹنے والے ہیں۔ شرح نمو، افراطِ زر، محاصل کی وصولیابی، ترقیاتی بجٹ وغیرہ وغیرہ میں ریکارڈ اضافہ، اتنا کہ مخالفین کے مونہہ بند اور زبانیں گنگ ہو جائیں گی۔ خوشحالی کے ایک چھوڑ درجنوں باب کھلنے والے ہیں۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 5 دن پہلے 

  پاکستان میں سیاستدان ، دانشور ، علما اور میڈیا کے شعبدہ گر دن بھر انتہا پسندی کی مذمت کرتے ہیں اور اپنی امن کی خواہش کا اعادہ کرتے رہتے ہیں۔ وہ طالبان کی جارحانہ روش ، خود کش حملوں، عدم رواداری ، بے صبری اور تحمل و برداشت کی فقدان کی شکایت کرتے ہیں۔ عام لوگ بی بی سی کے ذریعے اپنے موقف کا اظہار کرتے ہوئے کہتے ہیں کہ وہ امن سے رہنا چاہتے ہیں۔ لگتا ہے سارا پاکستانی معاشرہ امن کا حامی ہے لیکن اس کی دسترس میں امن ہے ہی نہیں۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 5 دن پہلے 

پاک افغان تعلقات ماضی میں بھی دہشت گردی جیسے مشترکہ مسئلے سے نمٹنے کے معاملے پر اختلافات کے باعث کشیدگی کا شکار رہے ہیں مگر اب تو بات خطرناک ہو چکی ہے۔ اس کی مثال حالیہ چند ماہ میں دوںوں ممالک کے مابین بڑھتی ہوئی تلخی ہے۔ اسے کو کم کرنے کے لئے اور افغان حکومت کو دہشت گردی کے خلاف جنگ میں اپنی  مدد کا یقین دلانے کے لئے پاکستان کے فوجی اور پالیمانی وفود نے حالیہ دنوں میں افغانستان کے دورے بھی کئے۔ مگر  بدقسمتی سےسانحہ چمن جیسے افسوسناک واقعات رونما ہو رہے ہیں جو بلا شبہ دونوں ممالک کے تعلاقات پر منفی اثرات مرتب کرتے ہیں۔  بظاہر ایسے مواقع کا بھرپور فائدہ افغان حکومت میں موجود چند اینٹی پاکستان عناصر  کو ہوتا ہے جو اسے پاکستان مخالف جذبات ابھارنے کے لئے استعمال کرتے ہیں۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 5 دن پہلے 

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کےسربراہ میجر جنرل آصف غفور نے 17اپریل 2017  کو  ایک پریس کانفرنس میں بتایا کہ کالعدم تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) اور کالعدم جماعت الاحرار کے ترجمان احسان اللہ احسان نے خود کو سیکورٹی فورسز کے حوالے کر دیا ہے۔ بعدازاں پاک فوج نے احسان اللہ احسان کا اعترافی ویڈیو بیان جاری کیا، جس میں اس نے ٹی ٹی پی کے بھارت کی خفیہ ایجنسی ’را‘ اور افغانستان کی ’این ڈی ایس‘ سے روابط کا انکشاف کرنے کے علاوہ یہ بھی بتایا تھا کہ کالعدم تنظیم اسرائیل سے بھی مدد لینے کے لیے تیارتھی۔

مزید پڑھیں

Islamic Council Norway Fails Muslims and the Society

By hiring Nikab-wearing Leyla Hasic, Islamic Council Norway has taken a clear stand in a controversial debate. Norwegian Muslims neither are represented nor served with t

Read more

loading...