نگر نگر


  وقت اشاعت: 13 جون 2017

امریکہ کے ایک اہم ادارہ راسموس نے ایک رپورٹ جاری کی ہے اس سروے رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ اقتصادی بحران کا شکار امریکی قوم اور سرمایہ دارانہ نظام کی مقبولیت میں تیزی سے کمی کے ساتھ ”سوشلزم“ جس کو کچھ عرصہ قبل امریکہ میں ممنوعہ لفظ سمجھا جاتا تھا کا استعمال بھی بڑھتا جا رہا ہے۔ رپورٹ کے مطابق اقتصادی بحران کے بعد سرمایہ داری نظام کو سوشلزم سے بہتر کہنے والے امریکی شہریوں کی شرح 50 فیصد سے کچھ ہی زائد رہ گئی ہے۔ 40 سال سے زیادہ امریکی شہریوں کی اکثریت نے جو 52 فیصد افراد پر مشتمل ہے نے کساد بازاری سے پاک سرمایہ دارانہ نظام کو سوشلزم سے بہتر قرار دیا تاہم اس سے کچھ کم عمر کے شہریوں کی ایک بڑی تعداد نے سوشلزم کو بہتر نظام قرار دیا۔ 27 فیصد نے کہا کہ وہ نہیں جانتے سرمایہ دارانہ نظام بہتر ہے یا سوشلزم معیشت۔ سروے کے مطابق امریکی میں ڈیموکریٹ پارٹی سے تعلق رکھنے والے 32 فیصد افراد سوشلزم کے حامی ہیں۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 06 جون 2017

ہالینڈ کے ایک روزنامہ نے اے پی پی کے حوالے سے بتایا ہے کہ اقوام متحدہ کے سروے کے مطابق 2050 تک بھارت آبادی کے لحاظ سے دنیا کا سب سے بڑا ملک بن جائے گا اور یہ چین کو آبادی میں پیچھے چھوڑ دے گا۔ بھارت ان آٹھ ممالک میں شامل ہے جن کی آبادی تیزی سے بڑھ رہی ہے۔ ایک اندازے کے مطابق اس وقت چین، بھارت، بنگلہ دیش، پاکستان اور سری لنکا کی مجموعی آبادی باقی دنیا کی  آبادی کے لگ بھگ ہے۔ اقوام متحدہ کے پاپولیشن ڈویژن نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ چین میں زیادہ بچے پیدا کرنے کے رجحان میں تبدیلی کے باعث بھارت آبادی کے حوالے سے چین پر سبقت لے جائے گا۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 23 مئی 2017

پاکستان کی معیشت کی حالت اتنی بری ہے کہ غیر ملکی پاکستان کے اکاﺅنٹ چیک کرتے ہیں اور بتایا گیا ہے کہ گزشتہ گیارہ ماہ میں جس قدر مہنگائی ہوئی ہے گزشتہ گیارہ سال میں ایسی مہنگائی نہ دیکھی نہ سنی۔ یہ بات بھی یقین کے ساتھ کہی جا سکتی ہے کہ حکومت نے مہنگائی کو آسمان تک پہنچا دیا ہے۔ کہنے والے کہتے ہیں کہ مہنگائی کے اس سیلاب میں حکمران خود بھی بہہ جائیں گے۔ آخر پر یہ خبر دیئے بغیر چارہ نہیں ہے کہ موجودہ حکومت نے اقتدار سنبھالنے کے بعد سے پٹرولیم اور اس کی مصنوعات میں 5 بار اضافہ کیا ہے۔

مزید پڑھیں

loading...

  وقت اشاعت: 16 مئی 2017

یہ بات تو یقینا آپ جانتے ہوں گے کہ امریکہ دنیا میں ترقی پذیر ممالک کو اسلحہ کی فروخت میں سب سے آگے ہے۔ شاید یہ بات آپ کے علم میں نہ ہو کہ امریکہ بہادر کے دنیا بھر میں 737 فوجی اڈے ہیں جن کی قیمت لگ بھگ 137 ارب ڈالر ہے (قیمت سے مراد یہ ہے کہ اگر ان فوجی اڈوں کی دوبارہ تعمیر کی جائے تو لاگت کم از کم 137 ارب ڈالر آئے گی) جو کہ بہت سے ملکوں کی جی ڈی پی (گروس ڈومیٹک پروڈکٹ) سے بھی زیادہ ہے۔ 2005 میں امریکی فوجیوں کی تعداد جو بیرونی ممالک میں تعینات تھی دو لاکھ نو سو 75 تھی جو اب 5 لاکھ کے قریب پہنچ چکی ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 10 مئی 2017

ہالینڈ کے ایک جریدہ نے پاکستان میں جے یو آئی کے صد سالہ  منعقدہ تین روزہ اجتماع عام اور بھارت کے شہر بھوپال میں ہونے والے تبلیغی اجتماع پر ایک مضمون شائع کیا ہے۔  مضمون نگار نے برطانوی نومسلم خاتون صحافی مریم (یووان ریڈلی) کا ذکر کرتے ہوئے پاکستان کی کالعدم مذہبی جماعت لشکر طیبہ کے امیر جماعت حافظ سعید کے بارے میں بھی لکھا ہے۔ انہوں نے بتایا  کہ حافظ سعید نے کچھ عرصہ قبل پاکستان کے ’’دی فرائیڈے ٹائمز‘‘ کو انٹرویو دیا تھا جس میں انہوں نے کہا تھا کہ ’’ہندوؤں، عیسائیوں اور یہودیوں کو قتل کرنا جہاد ہے۔‘‘

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 02 مئی 2017

امریکہ کی کمیونسٹ پارٹی نے عالمی اقتصادی بحران اور کساد بازار پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ماکسسٹ لینن کا دور پھر سے آ گیا ہے۔ امریکی ذرائع ابلاغ کے مطابق امریکہ کی کمیونسٹ پارٹی کے اعلیٰ عہدہ دار وڈیلا پیانا نے لکھا ہے کہ موجودہ عالمی اقتصادی بحران کارل مارکس اور فریڈرک اینگلز کی پیشن گوئی کے عین مطابق ہے اور اب دنیا کو ایسا محسوس ہو رہا ہے کہ ہمارا وقت دوبارہ آ پہنچا ہے اس وقت دنیا بھر کے عوام ایک اہم موڑ پر کھڑے ہیں۔ انہوں نے کہا ہے کہ امریکی کمیونسٹ پہلی بار ”دفاعی پوزیشن“ سے باہر آ چکے ہیں۔ ہم اپنی دنیا تخلیق کرنا چاہتے ہیں یہ ایسی دنیا ہو گی جو چند افراد کے فائدے اور خوشی کے بجائے معاشرے کے تمام طبقات کیلئے آسودگی اور راحتیں لے کر آئے گی ۔ انہوں نے کہا ہے کہ نوجوانوں کے اہم مسائل مثلاً امن، تعلیم، صحت اور روزگار ہیں اور ہم یہ سب فراہم کر سکتے ہیں۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 25 اپریل 2017

گزشتہ ہفتے ہالینڈ میں ارسطو ڈے منایا گیا۔ ملک کی تمام دانش گاہوں میں ارسطو کا دن کچھ اس انداز میں منایا گیا کہ طالب علموں کا جوش و خروش دیدنی تھا۔ مجھے یاد پڑتا ہے کہ چند سال قبل میر خلیل الرحمان میموریل سوسائٹی کے زیر اہتمام ’’نوجوان اور ان کا تعلیمی مستقبل‘‘ کے موضوع پر ایک سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے ایک وفاقی وزیر نے کہا تھا کہ ہمارے پاس 18 کروڑ کی آبادی ہے۔ انہی میں سے ہمیں البیرونی اور ابن سینا نکالنے ہوں گے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 11 اپریل 2017

 بیس سال کے اندر اندر یورپ میں سو سال تک جینا عام بات ہو گی۔ یہ میں نہیں کہہ رہا سائنسدان کہہ رہے ہیں۔ کیلیفورنیا کی سٹینفورڈ یونیورسٹی کے ماہر حیاتیات بھارتی نژاد ڈاکٹر شرد پاتلجاپور کے مطابق اوسط زندگی میں اضافہ جو علاج اور بیماری کی روک تھام کے شعبوں میں ترقی کی وجہ سے ہو رہا ہے اس دنیا اور دنیا میں رہنے والوں کی زیست کو بدل دے گا۔ اس کے ساتھ گہری سماجی اور سیاسی تبدیلیاں آئیں گی جن میں بوڑھوں کی تعداد میں ایک بہت بڑا اضافہ بھی شامل ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 04 اپریل 2017

لندن کی ایک خبر میں بتایا گیا ہے افریقہ میں فوج نے ستر ہزار سے زیادہ جنگجو پسندوں کو شہید کرنے کے بعد ان کے 550 سے زیادہ بچں اور بچیوں کو جو بارہ سال سے کم عمر ہیں مختلف مقامات سے اغوا کر کے ہیڈکوارٹر کے قریب آرمی کی نگرانی میں بنائے گئے ایک کیمپ میں جمع کر رکھا ہے۔ معلوم ہوا ہے کہ اس کیمپ سے 250 کے قریب کم سن بچے اور بچیاں غائب ہیں۔ مقامی فوج کا موقف یہ ہے کہ یہ بچے کیمپ سے بھاگ گئے ہیں جبکہ عینی شاہدوں کے مطابق 9 فوجی گاڑیوں میں ان بچوں کو شہر کی طرف لے جاتے دیکھا گیا ہے۔ذرائع نے بتایا ہے کہ اس کیمپ کے اندر آپریشن تھیٹر ہیں جہاں ان معصوم بچوں کے آپریشن کر کے مختلف اعضاء نکال کر امریکہ، یورپ اور عرب ملکوں کو فروخت کئے جا رہے ہیں۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 28 مارچ 2017

امریکہ سپر پاور سہی مگر وہ اس وقت معاشی طور پر 3 کھرب ڈالر کا مقروض ہے۔ اس نے افغانستان پر حملہ کرنے کیلئے تین کھرب پینتالیس ارب ڈالر کا بجٹ منظور کیا تھا اور آج ہی کی ایک خبر میں کہا گیا ہے کہ واشنگٹن کے ایک ریسرچ گروپ کے مطابق افغانستان میں امریکی فوجی کارروائی پر 800 ملین ڈالر سے ایک بلین ڈالر ماہانہ تک خرچ ہو رہا ہے۔

مزید پڑھیں

Conflicts in Conflict

The conflict of Jammu and Kashmir (J&K) is one of the long standing issues of the world. The unfortunate but this unique multi-ethnic, multilingual and multi-religious po

Read more

loading...