نگر نگر


  وقت اشاعت: 3 دن پہلے 

عزیزم بلاول زرداری نے اپنے ساتھ بھٹو کا لاحقہ بھی لگا رکھا ہے جو لوگوں کو یہ یاد دلانے کے لئے ہے کہ یہ نوخیز سیاستدان  بے نظیر بھٹو کا بیٹا اور جناب ذوالفقار علی بھٹو شہید کا نواسہ ہے  ۔ جی ہمیں سب یاد ہے اور یہ بھی یاد ہے کہ وہ حاکم علی زرداری کے پوتے ہیں ۔ بھلا بھٹو مرحوم اور اُن کی بیٹی کو کون بھول سکتا ہے اور مجھ جیسے فقیر کو جس نے اُن کے دو ماموؤں میر مُرتضیٰ اور شاہ نواز بھٹو کے ساتھ کابل میں کئی مہینے گزارے ہیں ، ایک ایک بات یاد ہے کہ کون کیا ہے ، کیا تھا  اور وہ عوام کے حق میں کیسا تھا ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 7 دن پہلے 

ووٹ کیا ہے؟
ووٹ کسی جمہوری ریاست میں شہریوں کے بلا تخصیصِ رنگ و نسل و مذہب و ملت اپنے سیاسی نمائندے چُننے کے اختیار اور حق کا نام ہے ۔ یہ حق ،  بالغ رائے دہی کے اصول کے مُطابق انفرادی اور اختیاری ہے ۔ دوسرے الفاظ میں ووٹروں اور سیاسی طالع آزماؤں کے مابین ووٹ ایک دوطرفہ معاہدہ ہے جو انتخابی مہم کے دوران پارٹی پروگرام کی اُس پیش کش کی بنیاد پر طے ہوتا ہے ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 12 اگست 2017

پاکستان میں اسلام کے بہتر فرقے ہیں،  مُلکِ خداداد  کے بہتر ٹی وی چینل ہیں ، بے شمار سرکاری اور غیر سرکاری ریڈیو ہیں جن کی نشریات چوبیس گھنٹے جاری رہتی ہیں ۔ انگنت اخبارات ہیں ، بھانت بھانت کے جرائد ہیں  اور  مستزاد یہ کہ سوشل میڈیا  کے ہوم میڈ صحافیوں کا حدِ لوح و قلم تک جال  پھیلا ہوا ہے ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 10 اگست 2017

ایدھی کے بعد آج کراچی اور پاکستان ایک اور انسان دوست ہستی سے محروم ہو گیا۔ ایک ایسی ہستی جس کے بارے میں ناخواندہ پاکستان کے بہت کم لوگوں کو علم ہوگا۔ کیوں کے لوگوں تک معلومات  پہنچانا ذرائع ابلاغ یعنی میڈیا کا کام ہوتا ہے اور ہمارے میڈیا کو جب کبھی آیان علیوں اور گلالئیوں سے فرصت ملتی ہے تو وہ ہمیں الطاف بھائی کے خوبصورت چہرے کا درشن کرواتے تھے یا پھر این آر او، میموگیٹ، دھرنے اور پاناما پاناما کا کھیل پیش کرتے ہیں۔  آج جب اس بڑی ہستی اور انسانیت کی معراج کا انتقال ہوا ہے تو پاکستان کے تمام پھول اور پھولوں کی پتیاں راولپنڈی میں کرپشن میں سزا یافتہ شخص پر نچھاور ہو رہے ہیں۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 05 اگست 2017

بارہ سال کی لڑکی کی آبرو ریزی کا بدلہ لینے کے لئے اہل خاندان نے متاثرہ بچی کے اٹھارہ سالہ بھائی کو ملزم کی سترہ سالہ چچیری بہن کے ساتھ ریپ کرنے کا حق دے دیا۔ معاملہ آپس میں طے کرلیا گیا۔ ملتان کے نواحی علاقے مظفر آباد میں پیش آنے والے اس المناک سانحہ کا انکشاف اس وقت ہؤا جب جنسی تشدد کا نشانہ بننے والی ایک لڑکی کے اہل خانہ نے باہمی ’معاہدہ ‘ کی خلاف ورزی کرتے ہوئے پولیس میں شکایت درج کروادی۔ اس طرح دوسرے خاندان نے بھی اپنی بچی کے ساتھ ہونے والی زیادتی کا مقدمہ درج کروایا۔ یہ واقعہ ایک ایسے ملک اور سماج میں پیش آیا ہے جہاں اخلاقیات کو ترجیح دی جاتی ہے، غیرت کے نام پر جان دی اور لی جاتی ہے، معاشرہ میں مذہب کے بارے میں سنگین مباحث کئے جاتے ہیں اور عقیدہ کو بنیاد بنا کر ہر دم کفر کے فتوے صادر کرنے کا اہتمام ہوتا ہے۔ معاشرہ کی دو کمسن بچیوں کے ساتھ بدترین جنسی ظلم کے بعد معاشرہ کے سب نمائیندوں سے صرف یہی پوچھا جا سکتا کہ یہ کون سی روایت ، کون سا عقیدہ اور کس قسم کی غیرت ہے۔ یہ تو گمراہی ، جہالت اور استحصال کی بدترین سطح ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 04 اگست 2017

پاکستان کا مطلب کیا
لا الہ الاللہ
جی ہاں  ، بلند بانگ دعوے اور نعرے ایجاد کرنا ، خواب دیکھنا اور تاریخ کی کتابوں میں اپنے دینی و نظریاتی  آباؤاجداد کے قصے دوہرانا اور اُن کی عظمت کی قسم کھا کر سر دھننا ، ہمارا پُرانا رویہ ہے ۔ نعروں کی جگالی کرتے کرتے ستر برس ہونے کو آئے مگر اس قوم کی حالت عموداً نہیں بدلی ۔ ہم نے لا الہ کے رستے پر اعلیٰ روحانی اور اخلاقی  اقدار کا سفر طے نہیں کیا ، کیونکہ یہ ہم سے ہو ہی نہیں پایا۔ تاہم برساتی مینڈکوں کی طرح شور بہت مچایا  گیا ہے ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 31 جولائی 2017

اکثر معاشروں میں یہ تاثر عام ہے کہ جب عدالت سیاسی معاملات یا سیاست سے منسلک افراد کے بارے میں فیصلہ کرتی ہے تو یہ عدالتوں اور اجتماعی معاشرہ کی فتح ہے۔ میری رائے میں حقیقت اس کے برعکس ہے۔ عدالت پرو ایکٹو ادارہ نہیں، یہ ری ایکٹیو ادارہ ہے۔ اس کا یہ مطلب نہیں کہ عدالت پروایکٹو فیصلے نہیں کر سکتی یا عدالتی فیصلے مستقبل پر اثر انداز نہیں ہوتے۔ بہت سے عدالتی فیصلے مستقبل کے لیے اصول کے طور پر کام کرتے ہیں۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 29 جولائی 2017

28 جولائی 2017
آج کا دن پاکستان کی تاریخ کا ایک اور سیاہ دن ہے ۔ آ ج پھر ایک نام نہاد منتخب حکومت کو ، جس کے پاس بھاری مینڈیٹ کا دعویٰ تھا ، اقتدار سے معزول کر دیا گیا ۔ اِس بار نہ تو فوج نے مارشل لا ٗ کا بگل بجایا اور نہ ہی کوئی بیرونی سازش ہوئی بلکہ اس کے بر عکس مقدر نے ستم ڈھایا ، آسمان گرا اور پانامہ کے پنگے کا دستاویزی پلندہ دھم سے کود کر وزیر اعظم ہاؤں میں آ گرا  اور عمران خان نے اُسے کیچ کرلیا ۔ وہ دن اور آج کا دن ، پاکستان کی پوری سیاست پانامہ پانامہ ہوگئی ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 28 جولائی 2017

میاں کو بکری چوری کی سزا کے بعد ،  خان مرغی چوری سزا کیلئے تیار رہیں۔

آئین میں اٹھارویں ترمیم کے وقت سینیٹر رضا ربانی نے آرٹیکل 62 اور 63 میں ترمیم کرنے پر بھی زور دیا تھا۔ رضا ربانی کا کہنا تھا کہ یہ آرٹیکل غیرمنتخب طاقتوراداروں کے ہاتھوں میں جمہوری اداروں کے خلاف ایک موثر ہتھیار بنیں گے۔ یہ آریٹکل منتخب جمہوری اداروں کے استحکام اور بالادستی کی راہ میں رکاوٹ ہیں اورطاقتوراسٹیبلشمنٹ بڑی آسانی سے ان کے سہارے منتخب اداروں اور حکومتوں کو اپنی ماتحتی میں لا سکتی ہے۔ پیپلز پارٹی اس پر تیار تھی مگر نواز لیگ راضی نہ ہوئی۔ کیونکہ نواز شریف اپنے حمائتی مذہبی حلقوں کو ناراض نہیں کرنا چاہتے تھے۔ بالآخر نواز شریف پر 62 کی تلوار چلی اور وہ نااہل قرار پا کر وزیراعظم ہاؤس سے جاتی عمرہ بجھوا دیئے گئے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 23 جولائی 2017

پانامہ ، پانامہ ، پانامہ  ۔ سُنتے سُنتے کان پک گئے اور کانوں سے سائیں سائیں  کی جگہ پائیں پائیں کی آواز آنے لگی ہے اب تو ۔ یار اب  معاف کردو۔ کب تک اس چیونٹی کو ہاتھی بنانے میں اپنی زندگی کو خوشامد کے تیل میں تلتے رہو گے ۔ جتنی تعریفیں درباریوں نے اپنے ممدوح آقا  کی کر لیں اُن کو جمع کریں تو فردوسی کے شاہ نامے کی پچاس جلدیں تیار ہو جائیں گی ۔

مزید پڑھیں

Praise and prayers for the great people of Turkey

One year ago, this day, the people of Turkey set an example by defending their elected government and President Recep Tayyip Erdogan against military rebels.

Read more

loading...