تبصرے تجزئیے

  • منیبہ ، جذبہ ، عمیر ، محمد افضل اور آرٹیکل چھ

    ویسے تو میں ایک آزاد خودمختار آئینی جمہوری ریاست کا شہری ہوں کہ جس کی نگاہ میں مجھ سمیت تمام شہری برابر ہیں اور یہ کہ اس ریاست نے تحریراً و حلفاً مجھ سمیت بائیس کروڑ شہریوں کے جان و مال، نقل و حرکت، صحت، تعلیم، روزگار، عقیدے، تحریر، تقریر جیسے بنیادی حقوق کے تحفظ کا وعدہ کر رک [..]مزید پڑھیں

  • نواز شریف: فرد سے علامت تک

    نواز شریف اب ایک فرد نہیں، ایک علامت کا نام ہے: مزاحمت کی علامت۔ یہ عام لوگ ہی ہوتے ہیں جنہیں کوئی ایک واقعہ، ایک نعرہ مستانہ، فرد سے علامت بنا دیتا ہے۔ تاریخ کے کسی موڑ پر وہ جرأتِ رندانہ کا مظاہرہ کرتے ہیں اور ماہ و سال سے اٹھ جاتے ہیں۔ پھر تاریخ انہیں اپنے آغوش میں لے لیتی [..]مزید پڑھیں

loading...
  • ڈیلفی کے شہید دیوتا اور کاٹھ کے گھڑ سوار

    ہم محبت اور موت کے دوراہے پر ہیں۔ اسکرپٹ اور واقعے کی منجدھار میں ہیں۔ سفر کی حکمت اور مہم جوئی کے جنون کی کشمکش فیصلہ کن موڑ کی طرف بڑھ رہی ہے۔ خواب اور منصوبے کے اس بحران میں تجزیے کے نصابی آلات کام نہیں دیتے کیونکہ کتاب طاق میں رکھ دی گئی ہے اور بدلاؤ کے عناصر نے تلبیس کا نقا [..]مزید پڑھیں

  • کیا قانون صرف اندھا ہوتا ہے؟

    سنتے آئے ہیں کہ قانون اندھا ہوتا ہے۔ مگر ثابت یہ ہوا ہے کہ قانون صرف اندھا ہی نہیں ہوتا ، گونگا بہرہ بھی ہوتا ہے۔ لولالنگڑا ، اپاہج بھی ہوتا ہے اور فالج زدہ بھی۔ ظلم و بربریت اور بہیمانہ اندھے قتل کے کیمروں کی آنکھ میں محفوظ وہ مناظر جو ٹی وی سکرینوں کے ذریعے ساری دنیا دیکھتی ر [..]مزید پڑھیں

  • سانحہ ساہیوال اور ریاست مدینہ!

    عدل و انصاف کے بغیر کوئی معاشرہ نہیں چل سکتا۔ ملک میں موجودبر سر اقتدار جماعت تحریک انصاف کا منشور ہی انصاف کی فراہمی کو یقینی بنانا ہے۔ تحریک انصاف نے عمران خان کی قیادت میں انصاف کی بحالی کیلئے تقریباً بائیس سال عملی جدوجہد کی اور عوام کو بے یقینی سے نکالا۔  عوام کو عمران [..]مزید پڑھیں

  • جدید اردو ڈرامے کے خالق امتیاز علی تاجؔ

    سید امتیاز علی تاجؔ  13 اکتوبر  1900کو لاہور کے ایک علمی گھرانے میں پیدا ہوئے۔  ان کی والدہ محمدی بیگم بچوں کے لئے کہانیاں اور عورتوں کے لئے مضامین لکھا کرتی تھیں۔ تاجؔ کے اباؤ اجداد کا تعلق بخارا سے تھا جو مغل شہنشاہ اورنگزیب عالمگیر کے عہد میں ہندوستان آکر دیوبند ضلع سہا [..]مزید پڑھیں

  • احتجاج کا موسم

    ’ہم تو انہی سڑکوں پر  ڈیرہ جما ئے بیٹھے رہیں گے، جب تک لوٹی ہوئی دولت  واپس نہیں ہو تی اور ہم حکومت کو چلتا نہیں کر لیتے‘۔ لبنان کے شہر بیروت میں احتجاجی مظاہروں  میں شامل نوجوان لڑکی حبا  حیدر نے رپورٹر کو بتایا۔  لبنان میں گزشتہ ایک ہفتے سے زائد جاری احتجاجی [..]مزید پڑھیں

  • کیاہم واقعی ترقی کرنا چاہتے ہیں؟

    یہ ایک بنیادی نوعیت کا سوال ہے کہ کیا واقعی ہم بطور معاشرہ، ریاست اور حکومت ترقی کرنا چاہتے ہیں۔ اگرچہ سب کا مجموعی جواب یقینی طور پر یہ ہی ہوگا کہ ہم ترقی کے خواہش مند ہیں۔لیکن سوال یہ ہے کہ اگر واقعی ہم ترقی کرنا چاہتے ہیں تو ہمارا طرز عمل کیا ہونا چاہیے۔ کیونکہ محض ترقی کی خ [..]مزید پڑھیں

  • سیاست کے مقتل میں کھڑے نوازشریف

    نواز شریف سیاست کے مقتل میں کھڑے ہیں اور ن لیگ وقت کی عدالت میں۔ایک طرف نشترِ قاتل سے قطرہ قطرہ موت ٹپک اور رگِ جاں میں اتر رہی ہے۔  نواز شریف اس کی چاپ سن رہے ہیں جو لحظہ لحظہ قریب آتی جا رہی ہے۔ دوسری طرف ن لیگ کی صفوں میں کوئی اضطراب نہیں۔ وقت کے آبِ رواں پر اس کا سفینۂ حیا [..]مزید پڑھیں