تبصرے تجزئیے

  • کراچی کا سیاسی نوحہ

    ہمارا سیاسی المیہ یہ ہے کہ ہم دنیا بھر میں حکمرانی کے نظام کو شفاف بنانے کے مختلف تجربات سے کچھ سیکھنے کے لیے تیار نہیں۔ہم روائتی طور پر حکمرانی کے نظام کو قائم کرکے عام آدمی کی زندگی میں مشکلات پیدا کرنے کا سبب بنتے ہیں او رہماری حکمرانی کا نظام بنیاد ی طو ر پرعام آدمی کے مفادا [..]مزید پڑھیں

  • امت مسلمہ کا مفروضہ اور کشمیریوں کی جدو جہد

    تقسیم ہند کے بعد بھارت میں جواہر لال نہروکے علاوہ کوئی وزیر اعظم کشمیریوں سے اتنا سنجیدہ، خوشنما اور واضح وعدہ نہیں کر سکا ہے۔ 7اگست1952کو جواہر لال نہرو نے کہا تھا ہم کشمیر کے لوگوں کی مرضی کے خلاف بندوق کے زور پر ان سے کوئی بات نہیں منوانا چاہتے۔ اگر جموں کشمیر کے لوگ ہمارے ساتھ [..]مزید پڑھیں

loading...
  • نظریاتی نعرے میں سوال کی سرگوشی

    ٹھیک 80 برس پہلے اواخر اگست کے یہی دن تھے۔ نازی جرمنی کا وزیر خارجہ ربن ٹراپ اشتراکی روس کے دارالحکومت ماسکو پہنچا۔ جہاں اس نے سوویت وزیر خارجہ مولوٹوف کے ساتھ اس معاہدے پر دستخط کیے کہ جرمنی اور سوویت یونین ایک دوسرے کے خلاف جنگ نہیں کریں گے۔ یہ معاہدہ نظریاتی سوچ رکھنے والوں ک [..]مزید پڑھیں

  • حسین شیرازی کی کتاب ’بابو نگر‘

    حسین احمد شیرازی صاحب کی کتاب 'بابونگر' کا میں نے بہت تذکرہ سنا تھا۔ میرا ارادہ تھا کہ پاکستان گیا تو خرید لاؤں گا۔پاکستان جا کر میں نے اسلام آباد کی چند دکانوں سے پوچھا بھی لیکن کتاب نہ ملی۔حُسنِ اتفاق دیکھئے کہ انہی دنوں کتاب کے مصنف یعنی حسین شیرازی صاحب نے رابطہ کیا۔ می [..]مزید پڑھیں

  • عوام اور حکمران، کیا دو طبقات ہیں؟

    مسلم دنیا میں، کیا حکمران اور عوام ایک دوسرے سے بے نیاز ہیں؟ کیا دونوں کی دنیا الگ الگ ہے؟  آدرش، نصب العین، جذبات، مراد، کسی معاملے میں دونوں ایک پیج پر نہیں ہیں؟ ہمارے ہاں یہی سمجھا جاتا ہے۔ کشمیر، فلسطین، افغانستان جیسے بین الاقوامی معاملات ہوں یا غربت و افلاس جیسے مقا [..]مزید پڑھیں

  • معاشی صورتحال اور آئی ایم ایف کا نیا منی بجٹ

    حکومتی عمائدین چند دنوں سے خود کو مبارکباد دے رہے تھے کہ بالآخر اکانومی مستحکم بنیادوں پر کھڑی ہونا شروع ہو گئی اور نئی اقتصادی ٹیم کے وزیر اعظم عمران خان کی قیادت میں مثبت اقدامات کے نتائج سامنے آ رہے ہیں۔ اس ضمن میں سٹاک ایکسچینج کے حوالے دیے جا رہے تھے کہ ریکارڈ خسارے می [..]مزید پڑھیں

  • مسئلہ کشمیر: نئے تصورات پر عمل کرنے کی ضرورت

    کیا پاکستان مقبوضہ کشمیر کے حالیہ بحران کو حل کرنے کے لئے کشمیر تنازع کو ایک بالکل ہی نئے زاویہ سے دیکھنے کا طریقہ اختیار کرسکتا ہے؟  جواب ہاں تو ہے لیکن اس کام کے لیے جرأت مندانہ اور سرگرم رابطہ حکمت عملی مرتب کرکے اس پر عمل کرنا ہوگا۔ تاکہ موجودہ سفارتی حکمت عملی کو تقویت [..]مزید پڑھیں