تبصرے تجزئیے

  • بارہ موسموں کے محرم اور ذہانت کا بحران

    ڈاکٹر لال خان کو سلام پہنچے۔ ہماری دھوپ ڈھلنے کو آ پہنچی۔ دیدہ تر کی شبنم سوکھ چلی۔ شب سست گام کا ساحل ہمیں دکھائی نہیں دیا اور اب اس کی کچھ ایسی فکر بھی نہیں۔ ایک غم تھا کہ عمر رواں پہ سایہ فگن رہا، ایک ملال تھا کہ ہر سانس میں خنجر زن رہا۔ دل میں جب تک آگ تھی، ہم روشنی کرتے رہے۔ [..]مزید پڑھیں

  • کشمیرفریڈم سپرنگ کے رنگ مظفر آباد میں

    انڈیا کے قبضے کے خلاف کشمیر میں گزشتہ تیس سال سے بالخصوص آزادی کی بہار(فریڈم سپرنگ)جاری ہے۔اس’فریڈم سپرنگ‘ میں گرمی، خزاں اور سرد موسم بھی آتے رہے لیکن کشمیری نوجوانوں کی مزاحمتی جدوجہد اور قربانیوں کی ’فریڈم سپرنگ‘ جاری و ساری ہے۔ ایک لاکھ سے زائد کشمیریوں نے اپ [..]مزید پڑھیں

  • پارلیمانی جمہوریت اور سیاست کا مستقبل

    بدقسمتی سے پاکستان میں سیاست و جمہوریت  کا مقدمہ ہمیشہ سے کمزور رہا ہے۔ اس کی ایک بنیادی وجہ تو یہاں جمہوری نظام کا عدم تسلسل ہے۔ غیر سیاسی قوتوں کی مداخلتوں کی وجہ سے جمہوری نظام جڑ نہیں پکڑسکا۔  لیکن یہ آدھا سچ ہے۔ اس کا دوسرا پہلو  ہماری سیاسی جماعتوں اور قیادت کا طر [..]مزید پڑھیں

loading...
  • لال مسجد اور مسجد کا دینی تصور

    مسجد رزم گاہ میں بدل جائے تو جان لینا چاہیے کہ ہمارے فہمِ دین میں بنیادی خلل واقع ہو گیا ہے۔ چند روز پہلے اسلام آباد کی لال مسجد کے قریب سے گزرا تو آزردگی نے گھیر لیا۔ معلوم ہوتا تھا مسجد نہیں کوئی قلعہ ہے۔ چاروں طرف با وردی سپاہی، خاردار تار اور خوف کی فضا۔ باہر کا یہ منظر، ا [..]مزید پڑھیں

  • یوں روز دل نہ جلایا کریں

    بیمار کا حال پتلا ہے،  آنے والے تیماردار کے لئے بتانا  بہت آسان ہے۔ ٹوٹکے  تجویز کرنا  اس سے بھی آسان ہے کہ ان  کی شہادت کی ضرورت  ہوتی ہے نہ تصدیق کا کوئی تردد۔  ہاں قابل عمل شافی حل بتانا  مشکل  ہوتا ہے جو مریض کی حالت اور جیب کے مطابق ہو اور  سریع الاثر ب [..]مزید پڑھیں

  • یہ لاہور پر جان چھڑکنے والے

    آج کل ہمارا شہر لاہور دنیا کی توجہ کا مرکز بنا ہوا ہے۔ ایک طرف کرکٹ کا میلہ سجا ہوا ہے تو دوسری طرف ادب اور ادیبوں کا میلہ۔ اور انہی دنوں اس شہر بے مثال پر ایک اور کتاب بھی سامنے آ گئی ہے۔ یہ کتاب شہر لاہور کی تاریخ، اس کے قدیم و جدید تاریخی آثار یا اس میں رہنے والوں کی بول چا [..]مزید پڑھیں

  • انسانی تعلقات میں عمدہ قیادت کا کردار

    ہر انسان اہمیت کا حامل ہے۔  وہ ہر حال میں چاہتا ہے کہ دوسرے اس کی قدر کریں۔  ایک کمپنی اسی وقت بحسن و خوبی چل سکتی ہے جب ملازمین کے مشوروں کو اہمیت دی جائے اوران کی پریشانیوں کو حل کرنے کی کوشش کی جائے۔  ان کو حوصلہ دیا جائے۔  دوسروں کے سامنے ان کی کمزوریوں کی نشاندہی ن [..]مزید پڑھیں

  • نئی نسل سے مکالمہ

    خیال ہوا کہ اہلِ دانش کو اس جانب متوجہ کیا جائے۔ ان کے قلم اس موضوع کے لیے رواں ہوں اور ان کی خوش گفتاری اس کام آئے مگر یوں نہ تھا میں نے فقط چاہا تھا یوں ہو جائے۔ لکھنے اور بولنے والوں کی اپنی ترجیحات ہیں۔ ان کے نزدیک کچھ دیگر موضوعات زیادہ توجہ طلب تھے۔ کسی نے اس موضوع کو اگر [..]مزید پڑھیں

  • سیاستِ اسلامی اور مذہبی انتہا پسندی

    عمومی تاثر یہی ہے کہ مذہبی انتہا پسندی نے عدم برداشت کی اس صورتحال سے جنم لیا جس میں ایک دوسرے کو برداشت کرنے کا جذبہ کم اور بالادستی کا جنون زیادہ ہے۔ پاکستان کے حوالے سے اگر اس شدت پسندی کا جائزہ لیں تو ایک رائے یہ بھی ہے کہ مذہبی اختلافات کی خلیج، ایرانی انقلاب کے بعد گہری ہ [..]مزید پڑھیں