شہر شہر


  وقت اشاعت: 5 دن پہلے 

تاریخ کا مطالعہ کئی شعبہ جاتِ زندگی میں بہت ضروری  ہے ۔ گو کہ ہم تک تاریخ درست حالت میں نہیں پہنچی تاہم اس کی افادیت میں کمی نہیں آئی۔  تاریخ کا سبق ہمیں جاوید ہاشمی کی نواز شریف سے ملاقات کے بعد یاد آیا ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 7 دن پہلے 

دنیا بادشاہت سے بہت اچھی طرح سے واقف ہے اور بادشاہ یا ملکہ بننے کی خواہش ہردل کے کسی نہ کسی پنہاں گوشے میں دبکی بیٹھی رہتی ہے۔ بادشاہت میں طاقت کا منبع ایک فرد اوراس کا خاندان ہوتاہے۔ دنیا نے ترقی کے ساتھ ساتھ اس خاندانی حکمرانی سے جان چھڑا لی ۔ آج چند ممالک کے علاوہ بادشاہت صرف محلات یا ایک مہر تک محدود کر دی گئی ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 7 دن پہلے 

پیارے مولوی صاحب!
گزارش ہے کہ میں اس وقت مدینے میں ہوں۔ ویسی ہی ہوں جیسی پاکستان میں ہوتی ہوں۔ اِک بندہ گندا۔ باہر سے دھلی دھلائی اندر سے گناہوں اور خطاؤں سے لدی اور میلی۔ شیطان مردود یہاں بھی ساتھ ساتھ چلا آیا ہے اور عین نماز میں میرے سر پر پنجے گاڑ کر آ بیٹھتا ہے۔ امام تکبیر دیتا ہے تو چونک کر یاد آتا ہے کہ میں تو نماز میں ہوں! ساتھ ہی آنکھیں پھاڑ کر سامنے دیکھتی ہوں تو دھک سے رہ جاتی ہوں۔ الامان! صرف نماز ہی میں نہیں ہوں بلکہ مسجد نبوی میں بھی ہوں!

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 06 2017

گزشتہ کئی ماہ سے ملک خداداد پاکستان میں جمہوریت کی بقا کی خاطر کیا کچھ داؤ پر لگایا جا چکا ہے۔ جمہوریت کی آڑ میں اپنی اپنی مرضی کے قوانین مرتب دئیے جاتے رہے ہیں تاکہ اپنے اقتداروں کو دوام بخشا جاسکے۔  قوانین میں  ترامیم کرتے وقت اس بات کو نظر انداز کیا جا رہا ہے کہ آنے والے وقتوں میں ان ترامیم سے کیسے کیسے لوگ مستفید ہوں گے۔  محسوس ایسا ہورہا ہے جیسے فوج کے صبر کو آزمایا جا رہا ہے کیونکہ عوام تو ووٹ دینے کے ہی گنہگار ہوتے ہیں۔ پھر یہ لوگ اسمبلیوں میں اپنے مفادات کی جنگ لڑتے ہیں۔ 

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 30 2017

6نومبر کو اسلام آباد اور راولپنڈی کے سنگم پر فیض آباد کے مقام کو ختم نبوت ﷺ کو موضوع بناکر موجودہ حکومت کیلئے ایک آزمائش کا انتظام کیا گیا ۔ یہ 2014 کے بعد دھرنا آزمائش کی ایک اور لہر تھی ۔  پاناما کے بعد اس نئے  امتحان میں سب ہی کردار پرانے ہیں۔ 22دن بعد اس دھرنے کا اختتام حکومت کے تئیں ہیپی انڈنگ تھا ، دھرنا تقریباً پر امن انداز میں اختتام کو پہنچا۔ حالانکہ 20ویں دن دھرنا دینے والوں کے خلاف سیکیورٹی فورسز نے آپریشن کا آغاز دن چڑھتے ہی کردیا تھا۔ اور فیض آباد انٹر چینج میدان  جنگ بن گیا۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 29 2017

اس میں کوئی شک نہیں کہ  وطن عزیز پر حکمرانی کرنے والی ہر حکومت  ملک میں توانائی  کی کمی  کے سنگین مسئلے کو حل کرنے کے لیئے کوشاں رہی ہے۔  لیکن ان کی ترجیحات میں کافی غلطیاں نظر آئیں ۔ جس  سے ایسا تاثر ملتا رہا جیسے کہ کسی بادشاہ کے ہاتھ دولت تو آگئی لیکن استمال کرنے کا طریقہ نہ آیا  اور ادھر ادھر فضول   چیزوں پر دولت لٹا دی۔  اگر دولت قرض لے کر ہاتھ آئی ہو تو پھر رعایا کو اس کی سزا بھگتنی پڑتی ہے ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 24 2017

رب کائنات نے انسان کو اشرف المخلوقات کے درجے پر فائز کیا ہے۔ مگر حضرت انسان اس شرف کو لے کر خود  ہی کو خدا سمجھنے لگ گیا اور یہ سمجھنے سے قاصر ہوگیا کہ وعتصمو بحبل اللہ کیا ہوتاہے۔ قدرت کی دی ہوئی عقل اور دانش کو استعمال کرتے ہوئے انسان نے دنیا کو رہنے کے قابل بنانا شروع کیا اور آہستہ آہستہ اپنی آسائشوں کا سامان بنانے میں ایسی مہارت حاصل کرلی کہ آج دنیا میں  آسائش کی تقریباً ہر شے میسر ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 22 2017

18نومبر کو بلوچستان کے علاقے تربت سے پنجاب کے شہر گجرا ت سے تعلق رکھنے والے 5نوجوانوں کی لاشیں برآمد ہوئیں جنہیں فائرنگ کرکے قتل کیا گیا تھا۔ اس سے چند دن قبل 15افراد کی لاشیں بھی تربت ہی کے علاقے بلیدہ سے ملی تھیں۔ یعنی ایک ہفتہ میں 20لوگوں کا صوبے میں قتل اپنے ساتھ دہشت گردی کی نئی لہر لے آیا ہے۔ جس نے صوبائی سطح پر نون لیگی حکومت کیلئے کئی سوالات پیدا کردیئے ہیں ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 21 2017

سیاست کسی پیشے سے کم نہیں ہے۔ باضابطہ طور پر انتخابات میں شرکت کے بعد اقتدار سنبھالنے سے لے کر اگلے انتخابات تک تقریباً دنیا کے تمام ممالک میں منتخب نمائندے اپنی ذمہ داریاں احسن طریقے سے سرانجام دیتے ہیں۔ اور اس کا اندازہ ترقی یافتہ اور ترقی پذیر ممالک کی معاشی اور معاشرتی صورتحال سے لگایا جاسکتا ہے۔ معینہ مدت میں اپنی کاردگی کا اندازہ اگلے انتخابات سے لگایا جاتا ہے اور ناکامی کی صورت میں گھر چلے جاتے ہیں۔ اگر بدعنوان ہوتے ہیں تو عدالتوں کا سامنا کرتے ہیں۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 17 2017

جب سے گلوبل وارمنگ ( اردو میں عالمی گرمائش) کا سلسلہ شروع ہوا ہے نہ صرف گرمی کی شدت میں اضافہ ہوا ہے بلکہ  ہر سال گرمیوں کا  دورانیہ بھی بڑھ جاتا ہے۔  جیسا کہ نومبر کا دوسرا عشرہ ختم ہونے والا ہے مگر ان دنوں جس شدت کی سردی ہوا کرتی تھی اب نہیں ہے۔  کیونکہ اب موسم  بدل رہا ہے۔  دن چھوٹے اور راتیں طویل ہوتی جارہی ہیں۔ 

مزید پڑھیں

Growing dangers of Islamist radicalism on Pakistani politics

Mr Arshad Butt is an insightful observer of the political events in Pakistan. Even though the hallmark of Pakistani political developments and shabby deals defy any commo

Read more

loading...