شہر شہر


  وقت اشاعت: 06 فروری 2017

تعلیم ایک ہتھیار ہے، ایک طاقت ہے ، ایک حوصلہ ہے جوظالم کے ظلم کے خلاف لڑنے کے لئے مظلوم کو عطا ہوا ہے ۔ جب جہالت اور گمراہی کے اندھیرے حد سے بڑھ گئے تو تب اللہ رب العزت نے اس جہالت اور بربریت کا توڑ کرنے کے لئے عرش بریں سے پیغام اتارا کہ ’اقراء ‘ یعنی ’پڑھ ‘ اپنے رب کے نام سے جس سے بڑی اور کوئی طاقت نہیں۔ پھر نبی آخرالزمان کی شفاعت سے لے کر ابن ہیثم کی تحقیقات تک، بوعلی سینا کی ایجادات سے لے کر ابوحنیفہ کے تفکرات تک، سب اس بات کا بین ثبوت ہے کہ اللہ نے مسلمانوں کو جو پہلا پیغام دیا تھا وہ پیغام ہر دور میں مسلمانوں کی اولین ترجیح رہی ۔ اس کی بدولت ہی مسلمانوں نے نہ صرف دنیا کو جہالت کے اندھیروں سے نکالا بلکہ خود بھی ہر دور میں سرخرو ہوئے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 03 فروری 2017

ٹرمپ کی صدارت کے دو ہفتے پورے ہوچکے۔ امریکہ کے اندر لاکھوں لوگ ٹرمپ کی مخالفت میں احتجاج کررہے ہیں۔  مہذب معاشروں میں احتجاج مخالفت کا اہم ترین ذریعہ بھی ہے۔ اس احتجاج میں مشہور گلوکار، اداکار، اساتذہ، ڈاکٹر ، انجینئرز، اقلیتی راہنما تک شامل ہیں۔ کیوں کہ ان کو معلوم ہے کہ اگر ان کا احتجاج ناکام بھی ہوا اور ٹرمپ کی صدارت کا سفر جاری رہا (جو کہ موجودہ حالات میں یقیناً کہا جا سکتا ہے) تو انہیں انتقامی کاروائیاں نہیں سہنا پڑیں گی۔ جیسے ہمارے ہاں ہوتا ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 27 جنوری 2017

پانامہ ایشو پر ملک کی اعلیٰ عدلیہ کے باہر حکومتی حواریوں کی جانب سے جس طرح کی زبان زد عام استعمال ہورہی ہے، اس سے صاف ظاہر ہے حکومت اور اس کے حامی بری طرح بوکھلاہٹ کا شکار ہیں۔ انہیں یہ سمجھ ہی نہیں آرہا کہ کون سے لفظ کب بولنے ہیں۔  اپوزیشن کا کام ہی حکومت پر تنقید کرنا ہوتاہے۔ لیکن اگر حکومت کے نمائیندے بھی الفاظ کے چناؤ میں احتیاط کئے بغیر اپوزیشن پر کیچڑ اچھالنا شروع کردیں گے، تو وہ یہ نہ سمجھیں کہ اس کی چھینٹیں ان کے دامن پر نہیں پڑیں گی۔

مزید پڑھیں

loading...

  وقت اشاعت: 18 جنوری 2017

قیامت کے دن میدانِ حشر میں جہاں نیکیاں اور برائیاں تولی جائیں گی تو وہاں اس چیز کا بھی مطالبہ اور محاسبہ کیا جائے گا کہ اللہ تعالیٰ نے جو اپنی نعمتیں عطا فرمائی تھیں اُن کا کیا حق اور کیا شکر ادا کیا؟ ۔ بندہ کے پاس ہر چیز اللہ تعالیٰ ہی کی عطا کی ہوئی ہے ۔ ہر چیز کا ایک حق ہے اوراس حق کی ادائیگی کا مطالبہ کل قیامت کے دن اللہ تعالی کے حضور ضرور ہونا ہے ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 17 جنوری 2017

ہم کم و بیش تیس لاکھ ہیں جو تعلیم، صحت، شناخت، ملازمت جیسی بنیادی ضروریات سے مستفید نہیں ہو پا رہے۔ ہم تعلیم حاصل نہیں کر پا رہے، ہم ملازمتیں حاصل نہیں کر پا رہے۔ کوئی پرسان حال نہیں ہے۔ تیس لاکھ میں سے ایک میں بھی ہوں جو ان حالات کا شکار ہوں۔ پہلے یہ احساس نہیں تھا کیوں کہ کسی نے احساس دلایا ہی نہیں تھا۔ مگر اب شدت سے احساس دلایا بھی جا رہا ہے اور احساس ہو بھی رہا ہے۔ ہمیں وہ مانا نہیں جا رہا جو ہم ہیں۔ بلکہ ہم کو وہ مانا جا رہا ہے جو ہم نہیں ہیں۔ میری بہن اپنی تعلیم، شناخت کے مسئلے کی وجہ سے جاری نہیں رکھ پائی۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 04 جنوری 2017

میں بیماری سے نڈھال بستر پر لیٹا تھا کہ وہ میرے کمرے میں داخل ہوا۔ اس کی سانس پھولی ہوئی تھی ، چہرے پر پریشانی کے تیور واضح تھے، ماتھا پسینے سے شرابور، گھبراہٹ سے اس کے منہ سے آواز بھی ٹھیک سے نہیں نکل رہی ہے ۔ وہ بات بات پر لڑکھڑ ا رہا ہے ، اس نے اچانک ماتھا پیٹنا شروع کردیا۔ 

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 25 2016

بچپن میں اکثر بزرگ ایک قوم کے قصے اور کہانیاں سنایا کرتے تھے۔  کہ اس قوم کے گرد نمک کی دیوار تعمیر کی گئی تھی، وہ  سارا دن اسے چاٹتے رہتے۔  حتیٰ کہ رات ہوجاتی ہے۔ اگلی صبح وہی نمک کی دیوار دوبارہ اصلی حالت میں موجود ہوتی ہے جسے سب لوگ  دوبارہ چاٹنا شروع کردیتے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 22 2016

اسلامی ملک شام اس وقت پوری دنیا کی توجہ کا مرکز بنا ہوا ہے۔  کاش وہ ایسی توجہ نہ پاتا۔ کاش کچھ ایسا ہوتا کہ اس طرح کی شہرت اس کے حصے میں نہ آتی کہ کھنڈرات اس کا مقدر بن رہے ہوتے ۔ لاشیں اس کی بنیادوں میں دب رہی ہوتیں۔ کاش شام کو ایسی شہرت نہ نصیب ہوتی کہ اس میں بارود کی بو پھیلی ہوئی ہو۔ کاش اس اسلامی ملک کو عالمی منظرنامے میں ایسی توجہ نہ ملتی کہ تمام عالمی طاقتوں نے اس اہم ملک کو بھاگتے چور کی لنگوٹی سمجھا ہوا ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 19 2016

ہارٹ آف ایشیا کانفرنس امرتسر میں افغانستان کی بحالی و تعمیر نو کے لیے منعقد کی گئی تھی۔ اس کا بنیادی مقصد یہ تھا کہ جنگ سے تباہ حال افغانستان کو کس طرح اقوام عالم میں دوبارہ سے ایک ترقی پذیر ملک کی طرح کھڑا کیا جائے۔ اور اس سلسلے میں خطے کے تمام ممالک مل کر کام کریں۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 18 2016

گزرے وقتوں میں جب بھی دسمبر آیا
لوگوں کو اداس کر گیا، پریشان کر گیا

دسمبر کے آتے ہی لوگ غمگین ہو جاتے
گزرے وقتوں کو یاد کرتے آنسو بہاتے
 

مزید پڑھیں

Threat is from inside

Army Chief General Raheel Sharif assured the nation that country’s borders are secure and the army is aware of threats and intrigues of the enemies. Speaking at an even

Read more

loading...