شہر شہر


  وقت اشاعت: 7 دن پہلے 

نام اور کنیت:
آپؓ کا نام نامی اسم گرامی عبداللہ ہے ۔ زمانۂ جاہلیت میں آپؓ کو’’عبدالکعبۃ ‘‘ کہا جاتا تھا۔ حضوراقدس ؐنے آپؓ کا یہ نام بدل کرعبداللہ  رکھا۔ لقب صدیق اور عتیق ۔ والد کا نام عثمان، کنیت ابوقحافہ بن عامرہ اور والدہ کا نام سلمیٰ بنت صخر ہے۔
 

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 12 مارچ 2017

ہم لوگ تجارت و زراعت وغیرہ مختلف ذرائع سے روپیہ پیسہ کمانے میں جتنی محنت اور کوشش کرکے اس کو جمع کرتے ہیں، وہ سب اسی لئے ہوتا ہے کہ آنے والے وقت کے لئے کچھ ذخیرہ اپنے پاس محفوظ رہے تاکہ ضرورت کے وقت کام میں لایا جاسکے۔  نہ معلوم کس وقت کیا ضرورت پیش آجائے ۔ لیکن جو اصل ضرورت کا وقت ہے اور اُس کا پیش آنا بھی ضروری ہے اور اُس میں اپنی سخت احتیاج بھی ضروری ہے۔  یہ بھی یقینی ہے کہ اُس وقت صرف وہی کام آئے گا جو اپنی زندگی میں خدائی بینک میں جمع کردیا گیا ہو۔ 

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 25 فروری 2017

مہمان کے آنے پر اس کا پر تپاک استقبال کرنا، اسے خوش آمدید کہنا اور اس کی خاطر مدارات کرنے کا رواج روزِ اوّل سے ہی دنیا کی تمام مہذب قوموں کا شعار رہا ہے ۔ ہر ملک ، ہر علاقے اور ہر قوم میں مہمان نوازی کے انداز و اطوار اور اس کے طور طریقے مختلف ضرور ہیں لیکن اس بات میں کسی قوم کا بھی اختلاف نہیں کہ آنے والے مہمان کے اعزاز و اکرام میں اس کا پرتپاک استقبال کرنا، اسے خوش آمدید کہنا اور اس کی اپنی حیثیت کے مطابق بڑھ چڑھ کر ہر ممکن خدمت سر انجام دینا، اس کا بنیادی حق ہے ۔ اس لئے کہ دنیا کی ہر مہذب قوم کے نزدیک مہمان کی عزت و توقیر خود اپنی عزت و توقیر اور مہمان کی ذلت و توہین خود اپنی ذلت و توہین کے مترادف سمجھی جاتی ہے۔

مزید پڑھیں

loading...

  وقت اشاعت: 25 فروری 2017

سوچا اب کی بار بھی کچھ نہ لکھوں، ایک نہ سو سکھ ۔۔۔ نہ لکھوں گا ، نہ سوچوں گا۔ نہ ہی ذہنی خلفشار کا شکار ہوں گا۔ مگر بھلا ہو آزاد میڈیا کا ، بکھرے لاشے ، بہتا خون، لتھڑی دیواریں، روتی آنکھیں، بین کرتی مائیں، چلاتی بہنیں، دھاڑیں مارتے بھائی، بے سدھ ٹھنڈے فرش پہ ٹانگیں پسارے باپ، چاک گریباں بھاگتے بیٹے، ساکت و جامد آنکھیں لیے بچے ۔۔۔ کچھ اس انداز سے دکھاتا ہے کہ دل میں  اک ابال سا ابلنا شروع ہو جاتا ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 23 فروری 2017

پانامہ کیس کی سماعت مکمل ہوئی۔ نیا بینچ بنا اور روزانہ کی بنیاد پر سماعت بھی شروع ہو گئی۔ انصاف ہوتا نظر بھی آ رہا ہے۔ جو سب چھپائے بیٹھے تھے انہیں سب سامنے لانے پہ مجبور کر دیا گیا ہے۔ اور جو بنا دلائل کے خطابت کے زعم میں سزا دلوانے کے چکر میں تھے ان سے بھی کہہ دیا گیا ہے کہ بھئی انصاف کے تقاضوں کے مطابق دلائل دیں نہ کہ اپنی خطابت کی مہارت آزمائیں۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 06 فروری 2017

تعلیم ایک ہتھیار ہے، ایک طاقت ہے ، ایک حوصلہ ہے جوظالم کے ظلم کے خلاف لڑنے کے لئے مظلوم کو عطا ہوا ہے ۔ جب جہالت اور گمراہی کے اندھیرے حد سے بڑھ گئے تو تب اللہ رب العزت نے اس جہالت اور بربریت کا توڑ کرنے کے لئے عرش بریں سے پیغام اتارا کہ ’اقراء ‘ یعنی ’پڑھ ‘ اپنے رب کے نام سے جس سے بڑی اور کوئی طاقت نہیں۔ پھر نبی آخرالزمان کی شفاعت سے لے کر ابن ہیثم کی تحقیقات تک، بوعلی سینا کی ایجادات سے لے کر ابوحنیفہ کے تفکرات تک، سب اس بات کا بین ثبوت ہے کہ اللہ نے مسلمانوں کو جو پہلا پیغام دیا تھا وہ پیغام ہر دور میں مسلمانوں کی اولین ترجیح رہی ۔ اس کی بدولت ہی مسلمانوں نے نہ صرف دنیا کو جہالت کے اندھیروں سے نکالا بلکہ خود بھی ہر دور میں سرخرو ہوئے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 03 فروری 2017

ٹرمپ کی صدارت کے دو ہفتے پورے ہوچکے۔ امریکہ کے اندر لاکھوں لوگ ٹرمپ کی مخالفت میں احتجاج کررہے ہیں۔  مہذب معاشروں میں احتجاج مخالفت کا اہم ترین ذریعہ بھی ہے۔ اس احتجاج میں مشہور گلوکار، اداکار، اساتذہ، ڈاکٹر ، انجینئرز، اقلیتی راہنما تک شامل ہیں۔ کیوں کہ ان کو معلوم ہے کہ اگر ان کا احتجاج ناکام بھی ہوا اور ٹرمپ کی صدارت کا سفر جاری رہا (جو کہ موجودہ حالات میں یقیناً کہا جا سکتا ہے) تو انہیں انتقامی کاروائیاں نہیں سہنا پڑیں گی۔ جیسے ہمارے ہاں ہوتا ہے۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 27 جنوری 2017

پانامہ ایشو پر ملک کی اعلیٰ عدلیہ کے باہر حکومتی حواریوں کی جانب سے جس طرح کی زبان زد عام استعمال ہورہی ہے، اس سے صاف ظاہر ہے حکومت اور اس کے حامی بری طرح بوکھلاہٹ کا شکار ہیں۔ انہیں یہ سمجھ ہی نہیں آرہا کہ کون سے لفظ کب بولنے ہیں۔  اپوزیشن کا کام ہی حکومت پر تنقید کرنا ہوتاہے۔ لیکن اگر حکومت کے نمائیندے بھی الفاظ کے چناؤ میں احتیاط کئے بغیر اپوزیشن پر کیچڑ اچھالنا شروع کردیں گے، تو وہ یہ نہ سمجھیں کہ اس کی چھینٹیں ان کے دامن پر نہیں پڑیں گی۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 18 جنوری 2017

قیامت کے دن میدانِ حشر میں جہاں نیکیاں اور برائیاں تولی جائیں گی تو وہاں اس چیز کا بھی مطالبہ اور محاسبہ کیا جائے گا کہ اللہ تعالیٰ نے جو اپنی نعمتیں عطا فرمائی تھیں اُن کا کیا حق اور کیا شکر ادا کیا؟ ۔ بندہ کے پاس ہر چیز اللہ تعالیٰ ہی کی عطا کی ہوئی ہے ۔ ہر چیز کا ایک حق ہے اوراس حق کی ادائیگی کا مطالبہ کل قیامت کے دن اللہ تعالی کے حضور ضرور ہونا ہے ۔

مزید پڑھیں

  وقت اشاعت: 17 جنوری 2017

ہم کم و بیش تیس لاکھ ہیں جو تعلیم، صحت، شناخت، ملازمت جیسی بنیادی ضروریات سے مستفید نہیں ہو پا رہے۔ ہم تعلیم حاصل نہیں کر پا رہے، ہم ملازمتیں حاصل نہیں کر پا رہے۔ کوئی پرسان حال نہیں ہے۔ تیس لاکھ میں سے ایک میں بھی ہوں جو ان حالات کا شکار ہوں۔ پہلے یہ احساس نہیں تھا کیوں کہ کسی نے احساس دلایا ہی نہیں تھا۔ مگر اب شدت سے احساس دلایا بھی جا رہا ہے اور احساس ہو بھی رہا ہے۔ ہمیں وہ مانا نہیں جا رہا جو ہم ہیں۔ بلکہ ہم کو وہ مانا جا رہا ہے جو ہم نہیں ہیں۔ میری بہن اپنی تعلیم، شناخت کے مسئلے کی وجہ سے جاری نہیں رکھ پائی۔

مزید پڑھیں

Threat is from inside

Army Chief General Raheel Sharif assured the nation that country’s borders are secure and the army is aware of threats and intrigues of the enemies. Speaking at an even

Read more

loading...