لاہور کی فیکٹری میں سلنڈر پھٹنے سے آتشزدگی، 11 افراد جاں بحق

  • منگل 28 / جنوری / 2020
  • 1140

لاہور کے علاقے شاہدرہ میں قائم پرفیوم تیار کرنے والی فیکٹری میں سلنڈر پھٹنے سے عمارت میں آگ بھڑک اٹھی، جس کے نتیجے میں 11 افراد جاں بحق اور  2 شدید زخمی ہوگئے۔

اطلاعات کے مطابق کے شاہدرہ کے قریب نواحی علاقے پیرزادہ کالونی میں سلنڈر کے دھماکے سے دو منزلہ عمارت میں آگ لگ گئی تھی جس کے بعد وہ زمین بوس ہو گئی۔ اس کے ساتھ نمکو بنانے والی فیکٹری بھی مکمل طور پر تباہ ہو گئی۔ ریسکیو کے عہدیدار رانا اعجاز نے بتایا کہ آتشزدگی کے وقت 15 سے زائد مزدور فیکٹری میں کام میں مصروف تھے۔ ہلاکتوں کی وجوہات بتاتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ فیکٹری میں آگ پر قابو پالیا گیا تھا لیکن ہلاکتیں عمارت کی چھت گرنے سے ملبے تلے مزدروں کے دبنے کے باعث ہوئیں۔

سلنڈر پھٹنے سے ہونے والی آتشزدگی کے نتیجے میں فیکٹری کے مالک غلام رسول بھی جاں بحق ہوگئے۔ ریسکیو اہلکاروں کے مطابق آگ کے باعث فیکٹری کی بالائی منزل پر واقع کوارٹرز کی چھت گرنے سے 12 افراد ملبے تلے دب کر جاں بحق جبکہ دو زخمی ہوئے جن میں سے ایک کی حالت تشویشناک بتائی گئی۔

علاقہ مکینوں نے بتایا کہ انہیں یہ معلوم تھا کہ اس فیکٹری میں کپڑا بنتا ہے لیکن یہاں پرفیوم تیار کیے جانے اور کیمیکل کی موجودگی کا علم نہیں تھا۔  واقعے کے اطلاع ملتے ہی متعلقہ ادارے اور ریسکیو ٹیمز جائے وقوعہ پر پہنچ گئیں اور امدادی کارروائیوں کا آغاز کیا گیا۔

ریسکیو ٹیمز فیکٹری کا ملبہ ہٹانے کی کوششوں میں مصروف ہیں جبکہ اب تک 6 افراد کی لاشوں کو ملبے سے نکالا جاچکا ہے۔  سلنڈر پھٹنے سے تباہ ہونے والی فیکٹری پر امدادی کارروائیوں میں ریسکیو 1122 کی 10 گاڑیاں اور ایمبولینسز حصہ لیا۔

loading...